بابر اعظم کی کپتانی پر محسن نقوی کھل اٹھے۔

بابر اعظم کی کپتانی پر محسن نقوی کھل اٹھے۔

جس نے سلیکشن کمیٹی میں غلط فیصلے کیے اس کا بھی احتساب ہوگا، سربراہ پی سی بی

لاہور: پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کے چیئرمین محسن نقوی نے جمعرات کو کسی کا نام لیے بغیر کہا کہ سابق کرکٹرز کے ہیڈ کوچ گیری کرسٹن قومی ٹیم کے کپتان کے طور پر بابر اعظم کے مستقبل کا فیصلہ کریں گے۔

لاہور میں صحافیوں سے بات کرتے ہوئے چیئرمین پی سی بی کا کہنا تھا کہ ‘تاہم ابھی تک بابر اعظم سے متعلق کوئی فیصلہ نہیں ہوا ہے۔’

نقوی کا یہ تبصرہ حال ہی میں ختم ہونے والے T20 ورلڈ کپ 2024 میں ان کی خراب کارکردگی پر گرین شرٹس کی طرف سے شدید تنقید کا سامنا کرنے کے پس منظر میں آیا ہے جہاں قومی ٹیم کو باہر کردیا گیا تھا کیونکہ وہ سپر ایٹ مرحلے میں بھی جگہ بنانے میں ناکام رہے تھے۔

وہ نہ صرف ریاست ہائے متحدہ امریکہ سے ہارے تھے، جو پہلی بار بین الاقوامی اسٹیج پر کھیل رہے تھے، بلکہ بھارت سے تقریباً جیتنے والا میچ بھی ہار گئے تھے، جبکہ آئرلینڈ اور کینیڈا کے خلاف ان کی فتح – جو کہ کمزور ٹیمیں ہیں – بھی اس کے بعد آئی۔ سخت مقابلوں.

پی سی بی کے سربراہ نے صحافیوں کو بتایا کہ جب کوئی شخص ناراض ہو تو کوئی فیصلہ نہیں کرنا چاہیے کیونکہ جلد بازی میں اٹھائے گئے اقدامات زیادہ تر نتیجہ خیز ہوتے ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ میں صرف ان سابق کرکٹرز سے بات کر رہا ہوں جو پاکستان کرکٹ کی بہتری میں دلچسپی رکھتے ہیں۔

گزشتہ ماہ اعلیٰ عہدیدار نے کہا تھا کہ قومی ٹیم کی مایوس کن کارکردگی کی وجہ سے ’’بڑی سرجری‘‘ کی ضرورت ہے۔

“لوگ سرجری کے بارے میں پوچھ رہے ہیں لیکن آپ کو غصے میں کوئی بھی فیصلہ نہیں کرنا چاہیے۔ جلد بازی میں کیے جانے والے فیصلے اکثر نقصان دہ ثابت ہوتے ہیں۔”

نقوی بھی سلیکشن کمیٹی کے فیصلے سے زیادہ متاثر نظر نہیں آئے۔

انہوں نے کہا کہ جس نے بھی سلیکشن کمیٹی میں غلط فیصلے کیے اس کا بھی احتساب ہو گا۔

پی سی بی کے سربراہ نے یہ بھی کہا کہ انہوں نے ہیڈ کوچ گیری کرسٹن اور اسسٹنٹ کوچ اظہر محمود کو پاکستانی ٹیم کی کارکردگی پر بات چیت کے لیے بلایا ہے۔

نقوی نے مزید کہا، “کسٹن نے ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ میں پاکستانی ٹیم کی کارکردگی پر ایک تفصیلی رپورٹ بھی پیش کی ہے۔”

نقوی نے اعتراف کیا کہ وہ پاکستانی ٹیم میں “گروپنگ اور سیاست” کو بھی دیکھ رہے ہیں۔

انہوں نے یہ بھی اعادہ کیا کہ کھلاڑیوں کی قومی ٹیم میں شمولیت کا براہ راست تعلق ڈومیسٹک کرکٹ میں کارکردگی سے ہوگا۔


Discover more from Urdu News today-urdu news 21

Subscribe to get the latest posts to your email.

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Discover more from Urdu News today-urdu news 21

Subscribe now to keep reading and get access to the full archive.

Continue reading